صبح وشام یہ دو چھوٹی سورتیں پڑھنی شروع کردو دل کبھی گن اہ کی طرف نہیں جائے گا

صبح وشام یہ دو چھوٹی سورتیں پڑھنی شروع کردو دل کبھی گن اہ کی طرف نہیں جائے گا

قرآ ن پاک میں “سورت کہف” ہے۔ آپ نے اور میں نے اپنا یہ معمول بنانا ہے۔ کہ جب بھی جمعہ آئے اس کی تلاوت کرنی ہے۔ احادیث میں یہ بات ملتی ہے کہ سورت کہف ایک جمعے سے دوسر ے جمعے کے درمیان جتنے دن ہیں ان کو نور اور روشنی سے بھر دیتی ہے۔ وہ کس کے لیے جو اس کی تلاوت کرتا ہے۔”قل اعوذ برب الناس، قل اعوذ

برب الفلق” یہ بڑے مجرب ہیں۔ جو بندہ جادو میں ہے ، جنات میں ہے، کسی بھی وسوسوں ، وہموں یا کسی بھی قسم کے شیطانی وسوسوں میں پھنس جاتا ہے۔ او ر اس کے بعد لوگوں نے تجربہ کرکے بتلایا ہے۔ جن لوگوں کو ش یطان ی خیالات زیادہ آتے ہیں۔ یعنی جو راہ ہدایت سے خود محسو س کرتے ہوں ۔ کہ ہم اللہ سے ت وبہ کرتے ہیں۔

پھر ہمارے اندر گنا ہ کی خوا ہش پیدا ہوجاتی ہے۔ وہ کیا کریں ۔ وہ یہ دونوں “قل “کثر ت سے پڑھا کریں۔ اللہ تعالیٰ ان کی عباد ت میں ایسی لذت پید ا کرے گا۔ کہ وہ گن اہوں سے دور ہوجائیں گے ۔ تو ہمیں یہ “قل ” پڑھنے چاہیں ۔ کیونکہ خود رسول اللہ ﷺ پر یہ قل اترے ۔ آپ ﷺنے اپنا علاج ان دونوں قل کو پڑھ کر کیا ۔ آپ یہ دیکھیں

کہ ایک چھوٹا وائرس، ایک چھوٹا سا کرونا کتنا بڑا فتنہ بن گیا ہے۔ ڈبلیو۔ایچ ۔ او کیا پوری دنیا غلام بن گئی ہے۔ دجال تو اتنا بڑا فتنہ ہوگا کہ وہ تو شعبدہ بازی کرتے ہوئے کہے گا اگر میں تمہارے آباؤاجداد کو قبروں سے نکال دوں۔ زندہ کرلوں ۔ تومان لو گے مجھے رب۔ لو گ کہیں گے تو واقعی رب ہوگا۔ وہ اپنے شعبدہ بازی سے اور شیاطین

کی مد د سے ، اپنے شیاطین کو ان کے والد کی شکل دے کر قبروں سے زندہ کھڑا کردے گا۔ اتنا بڑا فتنہ ہوگا۔ وہی شخص اس کے فتنے سے بچے گا ۔ جو “سورت کہف ” کی پہلی دس آیا ت حفظ کرلے گا۔ دجال آبھی جائے گا تو اس کو صاف پتہ چل جائےگا۔ یہ دجال ہے یہ رب نہیں ہوسکتا۔ تو آپ سب اس کو بھی یاد کرنے کی کوشش کریں۔