اس 29 رمضان ( شب قدر) کی عبادت کا طریقہ

اس 29 رمضان ( شب قدر) کی عبادت کا طریقہ - Urdu Tv

حضوراکرم ﷺنے ارشاد فرمایا کہ : میری ا مت میں جو مرد یا عورت خواہش کرے کہ میری قب ر روشنی سے منور ہوجائے اسے چاہیے کہ وہ رمضان المبار ک کی شب قدروں میں کثرت کے ساتھ عبادت بجا لائے تاکہ مبار ک اور متبرک راتوں کی بدولت اللہ تعالیٰ اس کے نامہ ء اعمال سے برائیوں کو مٹا کر نیکیوں کاثواب لکھ دے ۔ شب قدر کی عبادت ستر ہزار راتوں سے افضل ہے۔ آج ہم آپ کو رمضان المبار ک کی شب قدروں میں پڑھے جانے والے چھ

طرح کے نوافل اور چھ وظائف کے بارے میں بتائیں گے ۔ ان نوافل اور ان وظائف کے بارے میں جاننے کے لیے اس آرٹیکل کومکمل پڑھیں۔ چار رکعت نماز دو سلام سے پڑھیں۔ ہر رکعت میں بعد سورت فاتحہ کے ایک بار سورت القدر اور ایک با ر سورت اخلاص پڑھیں۔ چار رکعت نماز نفل اداکرنے کےبعد ستر مرتبہ درود پاک پڑھیں۔ انشاءاللہ ! اس نماز کے پڑھنے والے کے حق میں فرشتے دعا کریں گے ۔ دوسرا: دو رکعت نفل پڑھے۔ ہر رکعت میں سورت فاتحہ کے بعد

سورت القدر ایک بار اور تین مرتبہ سورت اخلاص پڑھے ۔ دو رکعت نفل پور ے کرنے کے بعد آپ نے ستر مرتبہ استغفار پڑھنا ہے کوئی سا بھی استغفا ر پڑھ سکتے ہیں۔ پھر رو رو کر گڑ گڑ اکر اپنے گن اہوں کی معافی طلب کریں۔ انشاءاللہ ! اس نمازاورشب قدر کی برکت سے اللہ تعالیٰ اس کو بخش دے گا۔ تیسرا: یہ جو نوافل ہیں یہ مغفرت کے لیے بہت خاص ہیں۔ جو بھی شخص ان نوافل کو ادا کرکے اپنی بخشش کے لیے دعا کرے گا۔ انشاءاللہ! اللہ تعالیٰ اس نمازاور شب قدر کی برکت سے اس کی مغفرت فرماد ے گا۔ آپ نے چار رکعت نما ز نفل اد ا کرنے ہیں ۔ چار کعت نماز دو سلا م کے ساتھ پڑھنے ہیں۔ ہر رکعت میں سورت فاتحہ کے بعد سورت القدر ایک بار اور

سورت اخلاص تین بار پڑھنی ہے۔ اس کے بعد اسی جگہ بیٹھ کر بڑے آرام اور پیار سے آپ نے ستر مرتبہ پہلاکلمہ پڑھناہے اورپھر سر سجدے میں رکھ کر گڑ گڑ ا اپنے گن اہوں کی معافی طلب کرنی ہے۔ تو بہ واستغفار کرنی ہے۔ اور اس کے بعد عاجزی وانکساری کے ساتھ اللہ تعالیٰ سے اپنی بخشش کے لیے ، اپنے والدین کی بخشش کے لیے دعاکرے۔ انشاءاللہ ! اللہ تعالیٰ اس عمل کی برکت سے اور شب قدر کی برکت سے اس کی اور اس کے والدین کی بخشش فرمائے گا۔ چوتھا: رزق میں برکت اور گن اہوں کی بخشش کے لیے جو شخص یہ چار نوافل پڑھے گا اللہ تعالیٰ اس کے رزق میں برکت عطافرمائے گا اور اس کے گن اہوں کو بخش دے گا۔ آپ نے چار رکعت نفل اس طرح سے پڑھنے ہیں ۔ کہ ہر رکعت میں سورت فاتحہ کے بعد ایک بار سورت القدر اورایک بار سورت اخلاص پڑھنی ہے۔ چار

رکعت نفل اداکرنے کے بعدآپ نے ستر مرتبہ تیسرا کلمہ پڑھنا ہے۔ اس کے بعد سر سجدے میں رکھ کر اپنے رزق میں برکت کے لیے ، اپنے کاروبار میں برکت کے لیے اپنے گناہو ں کی بخشش کے لیے اپنے والدین کے گن اہوں کی بخشش کے لیے دعا کرے ۔ انشاءاللہ! اللہ تعالیٰ اپنے فضل سے اور اس نماز کی برکت سے اس کے رزق میں برکت عطا فرمائے گا۔ اس کے کاروبار میں برکت عطافرمائے اور اسکی اور اس کے والدین کی بخشش عطافرما دے گا۔ پانچواں : ہر طرح کی حاجت کے لیے جو شخص چار رکعت نماز نفل اس طرح پڑ ھ کر اپنی حاجت ، اپنی ضرورت اور اپنی مشکل کےلیے دعا کرے گا۔ انشاءاللہ ! اس کی حاجت ، اس کی ضرورت اور ا س کی مشکل کو ضرور حل فرمائیں گے ۔ آ پ نے چار رکعت نفل اس طرح ادا کرنے ہیں کہ سورت فاتحہ کے بعد ایک بار سورت القدر اور پانچ بار سورت اخلاص پڑھنی ہے۔چار کعت نماز دو سلا م کے ساتھ اداکرنے ہیں۔ چار رکعت نماز نفل مکمل ہونے کے بعد آپ نے

سوبار کلمہ طیبہ پڑھناہے۔ اس کے بعد اپنی حاجت ، اپنی ضرورت ، اپنی مشکل کے لیے دعا کرنی ہے۔ جو بھی آپ کی حاجت ہے ۔ جو بھی آپ کی ضرورت ہے۔ جو بھی آپ کی مشکل ہے۔ اس کے لیے دعا کرنی ہے۔ انشاءاللہ! اللہ تعالیٰ اس نماز کی برکت سے اور شب قدر کی برکت سے اور اپنے فضل سے آپ کی اس حاجت ، اس ضرورت ، اس مشکل کو ضرور حل فرمائیں گے چھٹا: جس شخص کوئی بڑی سے بڑی حاجت ہے۔ کوئی بڑے سے بڑا مسئلہ ہے کوئی بڑی سے بڑی ضرورت ہے تو اس شخص کو چاہیے کہ وہ چار رکعت نماز نفل اس طرح اداکرے ۔ اپنی ضرورت، اپنی حاجت ، اپنی مشکل کے لیے دعا کرے ۔ انشاءاللہ ! اس نما ز کی برکت اور اپنے فضل سے اس کی

اس حاجت ، مشکل کو حل فرما دیں گے ۔ آپ نے چار رکعت نما ز نفل دو سلا م کے ساتھ پڑھنے ہیں۔ ہر رکعت میں سورت فاتحہ کے بعد سورت القدر تین بار اور سورت اخلاص پچیس مرتبہ پڑھنے ہیں۔ سلام کے بعد سرسجدے میں رکھ کر یہ تسبیح ایک بار پڑھنی ہے۔ ” سبحان اللہ والحمد اللہ ولا الہ الا اللہ واللہ اکبر” اور پھر عاجزی وانکساری کے ساتھ اللہ تعالیٰ سے اپنی حاجت ، اپنی ضرورت ، اپنی مشکل کے لیے دعا کرنی ہے۔ جو بھی آپ کی حاجت ہے ۔ جو بھی آپ کی ضرورت ہے جو بھی آپ کی مشکل ہے اس کے لیے دعا کریں۔ اللہ تعالیٰ آپ کی دعا کو ضرور قبول فرمائےگا۔ ہماری دعا ہے کہ اللہ تعالیٰ ہم سب کو رمضان المبارک کی ان طاق راتوں میں زیادہ سے زیادہ عباد ت کرنے کی توفیق عطافرمائے۔