’’ مریم نواز نے جس کے ذریعے ہمارے ساتھ رابطہ کیا وہ ۔۔۔‘‘ (ن)لیگ کے نام پوچھنے پر حکومت بھی میدان میں آگئی، وضاحت دے دی

’’ مریم نواز نے جس کے ذریعے ہمارے ساتھ رابطہ کیا وہ ۔۔۔‘‘ (ن)لیگ کے نام پوچھنے پر حکومت بھی میدان میں آگئی، وضاحت دے دی

اسلام آباد (نیوز ڈیسک)  نجی ٹی وی چینل کے پروگرام میں بات کرتے ہوئے وزیراعظم عمران خان کے معاون خصوصی شہباز گل نے کہا کہ محمد زبیر نے اپنے ایک بیان میں کہا تھا کہ ہمارے آرمی چیف کے ساتھ 35 سال کے دیرینہ خاندانی تعلقات ہیں لیکن میں آپ کو محمد زبیر کے ہی خاندان کے ایک ذرائع سے بتا رہا ہوں کہ ان کے آرمی

چیف کے ساتھ کوئی دیرینہ تعلقات نہیں ہیں۔25 سے 30 سال پہلے لہاور میں ایک پولو میچ سے پہلے یا بعد میں ان کی جنرل قمر جاوید باجوہ سے ملاقات ہوئی تھی جو شاید 25 یا 30 سیکنڈ طویل تھی۔ اس کے علاوہ ان کی زندگی میں کوئی ملاقات نہیں ہوئی۔ شہباز گل نے کہا کہ جن کے ذریعے مریم نواز نے پیغام بھجوایا ہے وہ ہمارے

لیے بہت محترم ہیں اسی لیے ہم ان کا نام نہیں لے سکتے۔ہم اُن کا نام کیوں لیں؟ نام لینا ہے تو یہ لوگ لیں ، مشروبات دے کر فلمیں بنانے والے تو یہ لوگ خود ہیں ، اس کی بھی انہوں نے کوئی فلم بنائی ہو گی تو نام ان کو لینا چاہئیے۔شہباز گل نے کہا کہ ہم اُس شخص کا نام نہیں بتانا چاہتے ، ہمیں بس انہوں نے ایک پیغام دیا تھا جسے ہم نے مسترد کر دیا ۔ ان کو تو اللہ نے ہی ایکسپوز کر دیا ہے کوئی اور کیا کرے گا۔ شہباز گل نے مزید کیا کہا آپ بھی دیکھیں:

یاد رہے کہ فواد چوہدری نے بھی اپنے ایک بیان میں کہا تھا کہ مریم نواز لندن جانا چاہتی ہیں اور اس کے لیے بیک ڈور رابطے کیے گئے ہیں۔انہوں نے کہا تھا کہ وزیر اعظم عمران خان نے اس درخواست کو مکمل طور پر رد کر دیا، آپ تحریک کا شوق پورا کریں لیکن اس کے لیے آپ کو پاکستان رہنا ہو گا۔ لیکن محمد زبیر نے ان کے اس دعوے کی تردید کر دی تھی اور کہا تھا کہ حکومت سے کوئی بیک ڈور رابطے نہیں ہو رہے، فواد چوہدری بیک ڈور رابطوں سے متعلق ڈھٹائی سے جھوٹ بول رہے ہیں۔