’’ جہانگیر ترین کا شمار اُن لوگوں میں ہوتا ہے جو ۔۔۔‘‘ JKT پی ٹی آئی کا حصہ ہیں یا نہیں؟ صدرِ مملکت نے دو ٹوک اعلان کر دیا

اسلام آباد(نیوز ڈیسک) صدر مملکت ڈاکٹر عارف علوی نے کہا ہے کہ جہانگیر ترین پارٹی کے وفا دار ہیں۔ترین ان تین لوگوں میں سے ہیں جن کو سیاسی مذاکرات کرنے میں مہارت ہے۔انہوں نے نجی ٹی وی چینل کا انٹرویو دیتے ہوئے کہا کہ جہانگیر ترین کی اپنی پارٹی کے ساتھ وفاداری قائم ہے۔جو شوگر سکنڈل پر رپورٹ ہوئی،اس کی

آزادانہ تحقیقات ہوئیں اور جو کارروائی ہونی چاہئے تھی وہ کی گئی۔وزیراعظم نے اس معاملے میں جو کچھ کیا وہ اپنی جگہ پر درست ہے۔ایسا نہیں ہو سکتا کہ ہم لوگ اپنوں کو تحفظ فراہم کریں۔جہانگیر ترین خود پر لگے الزامات کا سامنا کر رہے ہیں،میں جانتا ہوں کہ دو تین لوگ سیاسی مذاکرات کرنے کے ماہر ہیں جن میں جہانگیر ترین، اسد

عمر اور پرویز خٹک شامل ہیں۔جہانگیر ترین نے آزاد امیدواروں کو پارٹی میں لانے کے لیے بہت محنت کی۔شوگر سکینڈل اپنے منطقی انجام کو پہنچے گالیکن جہانگیر ترین کی وفاداری اپنی جگہ قائم رہے گی، انہوں نے مزید کہا کہ فرض کرو خفیہ بیلٹ ہے تو پارٹی سے ہٹ کر بھی ووٹ دیں گے، اگر اوپن بیلٹ ہے تو پارٹی کے مطابق ووٹ

دیں گے، سینیٹ کا نتیجہ کچھ بھی ہو، وزیراعظم کو اعتماد کا ووٹ لینے کا نہیں کہوں گا،میرا خیال ہے کہ سینیٹ میں حفیظ شیخ کے نمبر کم نہیں ہوں گے، لیکن یہ وزیراعظم کا فیصلہ ہوگا۔عمران خان سے بات اور مشاورت ہوتی رہتی ہے، لیکن وہ میرے لیڈر ہیں۔ انہوں نے کہا کہ عمران خان آئین کے تحت کسی بھی ایشو پر اپنی حکومت کو

تحلیل کرسکتے ہیں، لیکن ایسا نہیں ہوگا، وزیراعظم سینیٹ الیکشن کے نتائج پراسمبلیاں نہیں توڑیں گے، سینیٹ الیکشن کے نتائج پر قومی اسمبلی تحلیل نہیں ہونی چاہیے۔اگر اوپن بیلٹ ہوتو پھر پتا بھی چلے گا کہ کس کی نمائندگی زیادہ ہے لیکن سیکرٹ بیلٹ پر ایسا نہیں ہوتا۔