یوسف رضا گیلانی کے نام پر سٹیمپ لگانے والے 7 سینیٹرز کو ایسا کرنے کیلئے کس نے کہا ؟ نجی ٹی وی نے سراغ لگا لیا ، بڑا دعویٰ

یوسف رضا گیلانی کے نام پر سٹیمپ لگانے والے 7 سینیٹرز کو ایسا کرنے کیلئے کس نے کہا ؟ نجی ٹی وی نے سراغ لگا لیا ، بڑا دعویٰ

اسلام آباد (نیوز ڈیسک  )گزشتہ روز ہونے والے چیئرمین اور ڈپٹی چیئرمین سینیٹ کے انتخاب میں حکومت نے بازی مار لی ہے جبکہ اپوزیشن کے سید یوسف رضا گیلانی اور مولانا عبدالغفور حیدری کو شکست کا سامنا کرنا پڑ گیاہے ۔تفصیلات کے مطابق چیئرمین سینیٹ کا انتخاب پریزائڈنگ افسر مظفر حسین شاہ کی زیر نگرانی ہوا ، سید

یوسف رضا گیلانی 42 ووٹ لینے میں کامیاب ہوئے جبکہ ان کے 7 ووٹ مسترد ہوئے ، مستردہونے والے ووٹوں میں سٹیمپ امیدوار کے نام کے اوپر لگائی گئی تھی جس بنیاد پر انہیں مسترد کر دیا گیا جبکہ ایک ووٹر نے دونوں امیدواروں کو ہی ووٹ ڈال دیا ۔صادق سنجرانی حکومتی امیدوار تھے اور انہوں نے 48 ووٹ حاصل کیے ۔اب نجی

ٹی وی سماءنیوز نے اپنے ذرائع کے حوالے سے دعویٰ کیاہے کہ یوسف رضا گیلانی کے سات ووٹ اپوزیشن کی اپنی غلطی کی وجہ سے ہی مسترد ہوئے ہیں کیونکہ مشکوک اراکین کی شناخت کیلئے انہیں نام کی جگہ پر مہر لگانے کی ہدایت کی گئی تھی ، سات سینیٹرز نے پارٹیوں کی ہدایت پر ہی گیلانی کے نام پر مہر لگائی ، پیپلز پارٹی کے

بعض رہنما انتخابی عمل کی نگرانی کر رہے تھے ، سیدی یوسف رضا گیلانی کے نام پر مہر لگانے والے سات سینیٹرز میں ن لیگی بھی شامل ہیں ، ان سینیٹرز نے بیلٹ پیپر کو شناخت کیلئے مختلف انداز میں تہہ کیا تھا ۔