معیشت کی بحالی اور 2 وزراء علیٰ کی کارکردگی! اسٹیبلشمنٹ نے وزیروں کے ذریعے عمران خان کو کیا پیغام دیا؟ تہلکہ خیز انکشاف

معیشت کی بحالی اور 2 وزراء علیٰ کی کارکردگی! اسٹیبلشمنٹ نے وزیروں کے ذریعے عمران خان کو کیا پیغام دیا؟ تہلکہ خیز انکشاف

اسلام آباد (نیوز ڈیسک ) اسٹیبلشمنٹ نے چند اہم وزراء کے ذریعے وزیر اعظم عمران خان کو کوئی پیغام بھجوا دیا ، یہ انکشاف سینئر صحافی و تجزیہ کار ڈاکٹر شاہد مسعود نے کیا۔ تفصیلات کے مطابق نجی ٹی وی چینل کے ایک پروگرام میں اظہار خیال کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ اسٹیبلشمنٹ نے چند اہم وزراء سے ملاقات کی ہے اور وزیر اعظم

عمران خان کو چند پیغامات بھجوائے گئے ہیں کہ اپنی ٹیم میں کچھ تبدیلیاں کریں ، اسٹیبلشمنٹ کا زیادہ زور معیشت اور 2 صوبوں کے وزریراعلیٰ پر ہے۔سینئر صحافی و تجزیہ کار کے مطابق آنے والے دنوں میں ایک وزیر خزانہ نظر نہیں آئے گا بلکہ بہت بڑی ٹاسک فورس ہوگی جس میں صنعت کار ، ماہر ین معاشیات اور وزیر خزانہ ہوں گے

جو ملک معیشت کو ٹھیک کرنے کی کوشش کریں گے۔دوسری طرف وزیراعظم عمران خان کے معاون خصوصی برائے سیاسی امور عامر ڈوگر نے وفاقی کابینہ میں مزید تبدیلیوں کا اشارہ دے دیا ، انہوں نے کہا کہ حفیظ شیخ کو ہٹائے جانے کے بعد کابینہ میں مزید تبدیلیوں کا امکان ہے ، جن میں سے کچھ وزیروں کو کارکردگی کی بنیاد پر ہٹایا

جاسکتا ہے ، اس ضمن میں کچھ وزارتوں میں تبدیلی جب کہ کچھ کو تقسیم کریں گے ، ایک وزیر فیصل آباد ، ایک بلوچستان عوامی پارٹی (بی اے پی) کا وزیر کابینہ میں شامل ہوگا ، عامر ڈوگر نے کہا کہ مہنگائی کا سیلاب نہ تھمنے کی ذمہ داری وزیر خزانہ پر ہی آتی ہے ، تاہم حفیظ شیخ پاکستان کو بہت بہتر پوزیشن میں لائے ، کیوں کہ

عالمی ڈونرز کے ساتھ بھی حفیظ شیخ نے اچھی طرح مذاکرات کیے۔ جب کہ وفاقی حکومت کی طرف سے وفاقی کابینہ میں ایک اور تبدیلی کرتے ہوئے تابش گوہر کو معاون خصوصی برائے پیٹرولیم مقرر کردیا ، وزیر اعظم عمران خان کی ہدایت پر ندیم بابر کے معاون خصوصی برائے پٹرولیم کا قلم دان چھوڑے جانے کے بعد ان کی جگہ وزیراعظم نے تابش گوہر کو معاون خصوصی برائے پیٹرولیم مقرر کردیا۔