ن لیگ کوبڑا دھچکا لگ گیا، دو سینئر رہنمائوں پر پابندی لگ گئی

خوشاب(ٹوڈے نیوز)لیگی رہنما رانا ثناءاللہ اور اویس لغاری کی انتخابی قوانین کو توڑنے کی کوشش، الیکشن کمیشن نے دونوں رہنماوں پر پابندی عائد کر دی ۔ تفصیلات کے مطابق الیکشن کمیشن نے رانا ثناءاللہ اور اویس لغاری کو انتخابی قوانین کو توڑنے کی کوشش پر وارننگ جاری کری دی ہے۔ذرائع نے بتایا ہے کہ الیکشن کمیشن نے

آئی جی پنجاب کو دونوں رہنماوں کے خوشاب میں داخلے پرپابندی عائدکرنے کے احکامات جاری کردئیے ہیں۔آئی جی پنجاب نے ہدایات پر عمل در آمد کی یقین دہانی کرائی۔الیکشن کمیشن کے مطابق خوشاب کے ضمنی انتخاب میں ضابطہ اخلاق کی خلاف ورزی پر رانا ثناءاللہ اور اویس لغاری کے خلاف ایکشن لیا گیا۔ الیکشن کمیشن نے مسلم لیگ

ن کے رانا ثناءاللہ اوراویس لغاری کو وارننگ جاری کرتے ہوئے ہدایات دی ہیں کہ دونوں رہنما ضمنی الیکشن کی انتخابی مہم کے سلسلے میں خوشاب کا دورہ نہ کریں۔ذرائع کے مطابق مسلم لیگ ن سے تعلق رکھنے والے دونوں نے کل خوشاب کا دورہ کرنے کا ارادہ ظاہر کیا تھا۔ آئی جی پنجاب نے متعلقہ ڈی پی او کو ضابطہ اخلاق کی خلاف

ورزی کو روکنے کیلئے احکامات جاری کر دیئے ہیں۔قبل ازیں اپنے ایک بیان میں رانا ثنااللہ کا کہنا تھا کہ پی ڈی ایم کی تحریک حکومت کے خاتمے تک جاری ہے گی۔ہم اور پیپلز پارٹی ایک دوسرے کے خلاف الیکشن لڑیں گے۔یکم جولائی

2019 کو میرے خلاف انتہائی گھٹیا حربہ اپنایا گیا۔انتقام لینے والے خود انتقام کا شکار ہوں گے۔شہباز شریف اور خواجہ آصف کو بھی عدالت سے انصاف ملے گا,انتقام لینے والے خود انتقام کا شکار ہوں گے۔ لیگی رہنما رانا ثناءاللہ اور اویس لغاری کی انتخابی قوانین کو توڑنے کی کوشش، الیکشن کمیشن نے دونوں رہنماوں پر پابندی عائد کر دی ۔