(ن)لیگ نے بڑا یوٹرن لے لیا! شہباز شریف کے سخت ترین مؤقف نے پوری پارٹی کوہلا کر رکھ دیا

(ن)لیگ نے بڑا یوٹرن لے لیا! شہباز شریف کے سخت ترین مؤقف نے پوری پارٹی کوہلا کر رکھ دیا

اسلام آباد (نیوز ڈیسک ) پاکستان مسلم لیگ ن کا بڑا یوٹرن دیکھنے میں آیا ہے،استعفوں کے معاملے پر ن لیگ بھی پیچھے ہٹنے لگی ہے۔پیپلز پارٹی کے دو ٹوک موقف کے بعد ن لیگ نے الگ سے استعفے نہ دینے کا فیصلہ کیا ہے۔مسلم لیگ ن نے پیپلزپارٹی کے دوٹوک موقف کے بعد استعفوں کا فیصلہ پی ڈی ایم کی قیادت پر چھوڑ دیا ہے۔شہباز

شریف نے استعفوں کے معاملے پر سخت موقف اختیار نہ کرنے کا حکم دیا ہے۔حمزہ شہباز شریف سمیت لیگی ارکان قومی اسمبلی کی اکثریت نے استعفے دینے کی مخالفت کی ہے۔ذرائع کے مطابق پاکستان مسلم لیگ ن کو یہ خدشہ ہے کہ ن لیگ کی خالی نشستوں پر پیپلز پارٹی امیدوار بن کر سامنے آکر الیکشن لڑ سکتے ہیں۔سینٹ الیکشن

میں یوسف رضا گیلانی کے اپوزیشن لیڈر بننے کے بعد ن لیگ کو کئی خدشات ہیں۔ذرائع کے مطابق حمزہ شہباز شریف بھی اسمبلیوں سے استعفے دینے کے مخالف ہیں۔دوسری جانب بلاول بھٹو زرداری کی زیرصدارت سینٹرل ایگزیکٹو کمیٹی نے فیصلہ کیاہے کہ اسمبلیوں سے استعفے دیں گے نہ پی ڈی ایم چھوڑیں گے۔پی ڈی ایم ہم نے بنائی

ہم کیوں چھوڑیں ،ارکان نے رائے دیتے ہوئے کہاکہ پی ڈی ایم کو فوری طور پر نہ چھوڑا جائے،جو پی ڈی ایم توڑنا چاہتے ہیں انہیں بے نقاب کیا جائے۔ ذرائع کے مطابق سابق صدر آصف زرداری اور چیئرمین پیپلزپارٹی بلاول بھٹو کی سربراہی میں سینٹرل ایگزیکٹو کمیٹی(سی ای سی)کااجلاس ہوا، بلاول ہاوس میں ہونے والے سی ای سی اجلاس میں

پی پی پی شعبہ خواتین کی مرکزی صدر فریال تالپورنے بھی شرکت کی،آصف زرداری بذریعہ ویڈیو لنک سی ای سی اجلاس میں شریک ہوئے۔اجلاس میں پی ڈی ایم کی جانب سے استعفوں کی تجویز پر تبادلہ خیال کیا گیا، اس کے علاوہ مستقبل میں اپوزیشن کی حکمت عملی پر بھی غورکیاگیا۔