صحت کارڈ کے بعد ’ راشن کارڈ ‘ کا اجراء! حکومت نے ایک اور فیصلہ کر لیا

صحت کارڈ کے بعد ’ راشن کارڈ ‘ کا اجراء! حکومت نے ایک اور فیصلہ کر لیا

پشاور(نیوز ڈیسک )خیبر پختونخوا حکومت نے صحت کارڈ کی طرز پر راشن کارڈمتعارف کرانے کا فیصلہ کرلیا۔ذرائع کے مطابق وزیراعلیٰ خیبر پختونخوا محمود خان نے ہدایت کی ہے کہ غریب اور مستحق گھرانوں کیلئے راشن کارڈکا اجرایقینی بنایا جائے۔ ذرائع کے مطابق صوبے میں راشن کارڈ پر اشیائے خورونوش مفت دی جائے گی جبکہ پہلے مرحلے

میں 4 اضلاع کے غریب و مستحق گھرانوں کو راشن کارڈ دیا جائے گا۔ دوسری جانب رمضان المبارک میں بازار، مارکیٹ اور شاپنگ مال شام 6 بجے بند ہونگے،محکمہ داخلہ خیبرپختونخوا نے نوٹیفکیشن جاری کردیا، نوٹیفکیشن کے مطابق اشیائے خوردونوش، میڈیکل سٹورز اور پیٹرول پمپ کھلے رہینگے، صوبہ بھر میںتمام بازار، مارکیٹ اور دیگر

کاروبار ہفتہ اور اتوار کو کاروبار مکمل بند رہے گا، مساجد میں نماز تراویح کھلے مقامات پرادا کی جائیں، ہر قسم کی تقریبات پر مکمل پابندی ہوگی، ریسٹورنٹ افطاری سے رات 12 بجے تک آوٹ ڈور، ہوم ڈیلیوری اور ٹیک اوے کے لئے کھلے رہیں گے، سنیمائوں، مزاروں اور پبلک پارکس مکمل طور پر بند رہیں گے، صرف واکنگ ٹریکس کھلے رہیں

گے، تمام نجی اور سرکاری دفاترمیں 50فیصد حاضری ہوگی، اندرون شہر ٹرانسپورٹ 50 فیصد مسافروں کیساتھ چلے گی، بین الاصوبائی پبلک ٹرانسپورٹ ہر ہفتے اور اتوار کو بند رہے گی، ماسک کا استعمال لازمی ہوگا۔